شروع اللہ کے نام سے جو بڑا مہربان نہایت رحم والا ہے ِ

انا للہ وانا الیہ راجعون۔۔۔!!! سعودی فرمانروا کےگھر سے افسوسناک خبر، پورا ملک سوگ میں ڈوب گیا


ریاض (نیوز ڈیسک ) سعودی فرمانروا کے بھائی انتقال کر گئے، شاہ سلما ن کے بڑے بھائی معتب بن عبد العزیز کی عمر 88 سال تھی، مرحوم کی نماز جنازہ مسجد حرم الحرام میں ادا کی جائیگی۔ سعودی خبر رساںا داروں کی جانب سے فراہم کردہ تفصیلات کے مطابق سعودی فرمانروا سلمان بن عبد العزیز کے بڑے بھائی معتب بن عبد العزیز88سال کی عمر میں انتقال

کر گئے ہیں ۔سعودی شاہی خاندان کی جانب سے جاری کردہ اعلامیہ کے مطابق معتب بن عبد العزیز کی نماز جنازہ مسجد الحرام میں ادا کی جائیگی۔ معتب بن عبد العزیز کے انتقال پر سعودی عوام کی جانب سے شدید رنج و غم کا اظہار کیا جا رہا ہے۔ معتب بن عبد العزیز کے انتقال پر پورے سعودی عرب کی فضاء سوگوار ہو گئی ہے۔ دوسری جانب ایک خبر کے مطابق تحدہ عرب امارات کی ریاست راس الخیمہ کے شاہی خاندان پر اس وقت سوگ کی سی کیفیت طاری ہے۔ راس الخیمہ کے حکمران خاندان سے تعلق رکھنے والا ایک نوجوان شہزادہ اپنے شوق کو پُورا کرنے کے دوران زندگی سے محروم ہو گیا۔ ایک خلیجی اخبار نے اپنی رپورٹ میں بتایا ہے کہ راس الخیمہ کے شہزادے شیخ سقر بن طارق بن قائد القاسمی ایک المناک ٹریفک حادثے کے نتیجے میں جاں بحق ہو گئے ہیں۔وہ ایک موٹر سائیکل کی سواری کر رہے تھے جب اُنہیں یہ جان لیوا حادثہ پیش آیا۔ نوجوان شہزادے شیخ سقر القاسمی کی نمازِ جنازہ آج شیخ زاید مسجد میں ادا کر دی گئی جس کے بعد اُن کی تدفین کچھ دیر قبل نماز ظہر کے بعد راس الخیمہ کے القواسم قبرستان میں ادا کر دی گئی۔اُن کی ناگہانی موت نے شاہی

خاندان کے ساتھ ساتھ راس الخیمہ اور دیگر اماراتی ریاستوں میں بھی سوگ کا سماں ہے۔خلیجی اخبار کے مطابق شہزادہ شیخ سقر بن طارق بن قائد القاسمی ایک عمدہ ایتھلیٹ بھی تھے۔ وہ کھیل کے میدانوں میں کئی نمایاں اعزازات اپنے نام کر چکے تھے۔ 2016ء میں انہوں نے پولیس ڈیپارٹمنٹ کی جانب سے کھیلتے ہوئے جُوجِتسو کے مقابلوں میں گولڈ میڈل بھی حاصل کیا تھا۔ شیخ سقر القاسمی کی وفات کے بعد شاہی خاندان سے افسوس کا اظہار کرنے والوں کا تانتا بندھ گیا۔ دُبئی، ابو ظہبی، شارجہ اور دیگر اماراتی ریاستوں کے اعلیٰ حکام نے بھی سوگوار خاندان سے تعزیت کا اظہار کیا اور شیخ سقر کی نمازِ جنازہ میں شرکت کی۔ اس کے علاوہ عوام کی جانب سے بھی سوشل میڈیا پر راس الخیمہ کے شاہی خاندان سے اس دُکھ کی گھڑی میں حوصلہ و صبر دینے کی خاطر اللہ تعالیٰ سے دُعا کی گئی۔





اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں
تازہ ترین خبریں

دلچسپ و عجیب

بزنس