شروع اللہ کے نام سے جو بڑا مہربان نہایت رحم والا ہے ِ

بریکنگ نیوز: شہید ایس پی طاہر داوڑ کے انتہائی قریبی شخصیت کو بھی قتل کر دیا گیا


پشاور (ویب ڈیسک) شمالی وزیرستان کے علاقے میرانشاہ میں فائرنگ سے ایس پی طاہر داوڑ کے بہنوئی جاں بحق ہوگئے۔ میرانشاہ میں میرعلی سب ڈویژن کے گاؤں خدی میں نامعلوم افراد نے فائرنگ کردی جس کے نتیجے میں منصور خدی جاں بحق ہوگئے۔ انہیں خدی کی مرکزی مارکیٹ میں نشانہ بنایا گیا۔ منصور خدی ایس پی طاہر داوڑ کے بہنوئی تھے

اور ملزمان انہیں قتل کرنے کے بعد فرار ہونے میں کامیاب ہو گئے۔ واضح رہے کہ ایس پی طاہر داوڑ کو بھی نامعلوم افراد نے وفاقی دارالحکومت اسلام آباد سے اغواء کر کے قتل کر دیا تھا۔ ان کی لاش افغانستان سے ملی تھی۔ افغانستان میں شہید کیے گئے خیبرپختونخوا پولیس کے ایس پی طاہر داوڑ کی پوسٹ مارٹم رپورٹ میں انکشاف ہوا ہے کہ قتل کئے جانے سے قبل انہیں کئی دن بھوکا پیاسا رکھا گیا تھا۔ ایس پی طاہر خان داوڑ کی پوسٹ مارٹم رپورٹ اسلام آباد پولیس کے حوالے کر دی گئی ہے جس کے مطابق ایس پی طاہر داوڑ کی موت لاش ملنے سے چند روز قبل ہو گئی تھی۔ موت کے وقت ان کا معدہ خالی تھا جو یہ ثابت کرتا ہے کہ انہیں کئی روز بھوکا اور پیاسا رکھا گیا۔ پوسٹ مارٹم رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ طاہر داوڑ کو فائرنگ کرکے شہید نہیں کیا گیا بلکہ مرنے سے پہلے انہیں شدید تشدد کا نشانہ بنایا گیا۔ ان کے جسم پر تشدد کے گہرے نشان تھے جب کہ ان کے بازوؤں اور پیروں کی کئی ہڈیاں بھی ٹوٹی ہوئی تھیں۔ واضح رہے کہ طاہر داوڑ کو گزشتہ ماہ اسلام آباد کے علاقے جی ٹین فور سے اغوا کیا گیا تھا اور اغوا کار انہیں افغانستان لے گئے جہاں انہیں بہیمانہ تشدد کرکے شہید

کردیا گیا تھا۔





اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں
تازہ ترین خبریں

دلچسپ و عجیب

بزنس