شروع اللہ کے نام سے جو بڑا مہربان نہایت رحم والا ہے ِ

بریکنگ نیوز : اپوزیشن کا احتجاج کسی کام نہ آیا۔۔۔ حکومت کو قومی اسمبلی میں بڑی کامیابی مل گئی


اسلام آباد(ویب ڈیسک) اپوزیشن کا احتجاج کسی کام نہ آیا ، حکومت کو قومی اسمبلی سے بڑی کامیابی مل گئی۔ اپوزیشن کے شدید احتجاج کے باوجود حکومت قومی اسمبلی سے 11 بلز کی منظوری لینے میں کامیاب ہو گئی۔ قومی اسمبلی نے 9آرڈیننس کی بل کی شکل میں منظوری دی۔ حکومت قومی اسمبلی کے پہلے روز ہی ریکارڈ قانون سازی کروانے میں کامیاب ہوگئی۔

ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی قاسم سوری کی زیر صدارت ہونے والے اجلاس میں اپوزیشن کے شدید احتجاج کے باوجود 11بلز منظور کرلئے۔ 11بلز میں 7حالیہ جاری کردہ آرڈیننس بھی شامل ہیں جبکہ قومی اسمبلی نے 3آرڈینسز میں 120دن کی توسیع کی منظوری دے بھی دی۔ ایوان میں مجموعی طور پر 15بل پیش کیے گئے جن میں 13آرڈیننس اور دو بلز بھی شامل تھے، منظور ہونے والے بلز میں قانونی معاونت انصاف اتھارٹی، اعلی عدلیہ خطاب اور لباس، بے نامی کاروباری معاملات، قومی احتساب ترمیمی بل، تحفظ مخبر نگران کمیشن کا قیام ، انصرام تولید اور وراثت ، نفاذ حقوق جائیداد برائے خواتین شامل ہیں۔ پاکستان طبی کمیشن، نیا پاکستان ہاوسنگ اتھارٹی اور مجموعہ ضابطہ دیوانی ترمیمی بل بھی منظور کئے گئے۔فیڈرل گورنمنٹ ایمپلائز اتھارٹی ،انسداد دہشت گردی ایکٹ میں ترمیم اور تعزیرات پاکستان میں ترمیم سے متعلق آرڈیننس کو 120دن کی توسیع دی گئی۔ قومی اسمبلی اجلاس کے آغاز میں ہی حکومت کی جانب سے آرڈیننس پیش کرنے کے معاملے پر اپوزیشن نے شدید احتجاج کرتے ہوئے اسپیکر ڈائس کا گھیراو کر کے ایجنڈے کی کاپیاں پھاڑ دیں۔ ایوان

میں آرڈیننس پیش کرنے کے معاملے پر نامنظور کے نعرے بھی لگائے گئے۔ اجلاس میں نماز کے وقفے کے بعد اجلاس بنا کسی کارروائی کے ملتوی کردیا گیا۔ اس سے قبل اجلاس میں ایل او سی پر فوجی جوانوں کی شہادت، اسپیکر قومی اسمبلی کے چچا اور دیگر ارکان قومی اسمبلی کے عزیز و اقارب کے دعا مغفرت کرائی گئی۔ اجلاس میں سابق صدر آصف زرداری، شاہد خاقان عباسی اور خورشید شاہ کی صحتیابی کے لئے دعا بھی کرائی گئی۔





اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں
تازہ ترین خبریں

دلچسپ و عجیب

بزنس