شروع اللہ کے نام سے جو بڑا مہربان نہایت رحم والا ہے ِ

پی ایس 86 دادو کے ضمنی الیکشن میں کس امیدوار نے میدان مار لیا ؟ مکمل غیر سرکاری نتائج نے پوری قوم کو حیران کر ڈالا


سکھر (ویب ڈیسک) سندھ کے ضلع دادو کی تحصیل جوہی پر مشتمل صوبائی اسمبلی کے حلقہ پی ایس 86 پر ضمنی انتخاب میں پیپلز پارٹی کے امیدوار امیدوار پیر صالح شاہ جیلانی نے میدان مار لیا۔غیر سرکاری اور غیر حتمی نتائج کے مطابق پیپلز پارٹی کے امیدوار پیر صالح شاہ جیلانی نے 42,254 ووٹ حاصل کیے جبکہ اُن کے مدمقابل تحریک انصاف کے

امداد حسین لغاری کو 25,555 ووٹ ملے۔یہ نشست پیپلز پارٹی کے غلام شاہ جیلانی کے انتقال کے باعث خالی ہوئی تھی، جس پر پیپلز پارٹی، تحریک انصاف اور 4 آزاد امیدواروں کے درمیان مقابلہ تھا۔پیپلز پارٹی نے مرحوم ایم پی اے غلام شاہ جیلانی کے بیٹے پیر صالح شاہ جیلانی کو ٹکٹ دیا تھا۔سندھ اسمبلی کی نشست پی ایس 86 دادو 4 جوہی کے 158 پولنگ اسٹیشنوں پر پولنگ کا عمل صبح 8 بجے شروع ہوا ، جوبغیر کسی وقفے کے شام 5 بجے تک جاری رہا۔پولنگ کے دوران فوج اور رینجرز کے 1100 جوان اور پولیس کے 1300 اہل کار ڈیوٹی انجام دے رہے ہیں جو پولنگ اسٹیشنز کے اندر اور باہر تعینات تھی۔ایس ایس پی دادو فرح رضا ملک کے مطابق حلقے میں 158 پولنگ اسٹیشنز میں سے 10 انتہائی حساس اور 62 کو حساس قرار دیا گیا تھا۔ضمنی انتخاب کے سلسلے میں آج ضلع بھر میں عام تعطیل تھی۔





اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں
تازہ ترین خبریں

دلچسپ و عجیب

بزنس