شروع اللہ کے نام سے جو بڑا مہربان نہایت رحم والا ہے ِ

آزادکشمیر کے عوام کی جانب سے کنٹرول لائن روندنے کیلئے سیاسی قیادت پر سخت دباؤ ہے:فاروق حیدر خان


اسلام آباد (نیوزڈیسک)آزادجموں و کشمیر کے وزیراعظم راجہ محمد فاروق حیدر خان نے کہا ہے کہ بھارت کی جانب سے مقبوضہ کشمیر کے عوام پر ڈھائے جانے والے مظالم کے خلاف آزادکشمیر اور دنیا بھر میں رہنے والے پاکستانی و کشمیری سخت جذباتی کیفیت میں ہیں،آزادکشمیر کے عوام کی جانب سے کنٹرول لائن روندنے کیلیے سیاسی قیادت پر سخت

دباو ہے،کل جماعتی کانفرنس کی ایگزیکٹو کمیٹی کا دوسرا سیشن ہو گا جس میں جلد اپنے لائحہ عمل کا اعلان کریں گے،آزادکشمیر حکومت کے تمام وسائل تحریک آزادی کشمیر کے لئے حاضر ہیں،میڈیا نے تحریک آزادی کیلئے بہترین کردار ادا کیا ہے اسے جاری رہنا چاہیے۔ کل جماعتی کانفرنس کے بعد کانفرنس کے شرکاء کے ہمراہ پرہجوم پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوے وزیراعظم آزاد کشمیر راجہ محمد فاروق خان نے کہا کہ وادی میں کوفیو کو 38 دن ہو گئے ہیں،غیر معینہ مدت کے کرفیو کے دوران کشمیری عوام کو محبوس کر کے رکھا ہوا ہے،ہم پر ہمارے اپنے عوام کی جانب سے بڑا دباؤ ہے کہ کنٹرول لائن کو عبور کیا جائے۔انہوں نے کہا لوگوں کے اندر ایک جذبہ اور امنگ ہے یہی وجہ ہے کہ کھوئی رٹہ اور چڑہوئی سے بہادر کشمیری نوجوانوں نے کنٹرول لائن روند ڈالی حالانکہ انہیں پتہ تھا کہ بھارتی فوج کی جانب سے گولی آئیگی، بہادر کشمیریوں کا جذبہ پہلے سے بھی زیادہ ہو چکا ہے۔ایک سوال کے جواب میں وزیراعظم نے کہا کہ اس وقت مقبوضہ کشمیر سب سے بڑی انسانی جیل بن چکی ہے جہاں 90 لاکھ افراد بند ہیں،کشمیری عوام بہت بڑے انسانی

المیے کا شکار ہیں،بھارتی فوج کنٹرول لائن پر نہتے شہریوں کو نشانہ بنا رہی ہے، بھارتی فوج کی بلا اشتعال فائرنگ سے کئی افراد شہید اور زخمی ہوے۔انہوں نے کہا کہ عالمی اداروں بالخصوص اقوام متحدہ کو چاہیے کہ وہ کشمیر کے حوالے سے اپنی قراردادوں پر عملدرآمد یقینی بنائے،بھارت کے اقدامات کو دنیا میں پذیرائی نہیں ملی،بیرون ملک مقیم کشمیریوں اور پاکستانیوں کا مشکور ہوں جو مسئلہ کشمیر کو اجاگر کر رہے ہیں،غیر معینہ مدت کے کرفیو کے باوجود ہندوستان کشمیریوں کی گردن کو جھکا نہیں سکا ہے۔





اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں
تازہ ترین خبریں

دلچسپ و عجیب

بزنس