شروع اللہ کے نام سے جو بڑا مہربان نہایت رحم والا ہے ِ

ایران نے مقامی طور پر تیار کردہ میزائل دفاعی نظام افواج کے حوالے کر دیا


تہران (نیوزڈیسک) : پاکستان کے ہمسایہ ملک ایران نے مقامی طور پر تیار کردہ میزائل اپنی افواج کے سپرد کر دیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق ایران نے مقامی طور پر تیار کردہ دفاعی نظام اپنی فوج کے سپرد کر دیا ہے۔ اس موقع پرایران کے وزیر دفاع بریگیڈیئر جنرل عامر حاتمی نے کہا کہ پندرہ خرداد دشمن کے جنگی طیاروں اور ڈرونز کو ایک سو بیس کلومیٹر

کے فاصلے تک نشانہ بناسکتا ہے۔ ایرانی حکام نے دعویٰ کیا کہ دفاعی نظام پینتالیس کلومیٹر کے رقبے میں اسٹیلتھ ٹیکنالوجی کے حامل اہداف کا بھی پتا چلاسکتا ہے۔ حال ہی میں اپنے ایک اور بیان میں اُن کا کہنا تھا کہ حملے کی صورت میں فوجی تیاریوں کو بلند درجے تک پہنچاتے ہوئے مکمل کیا جا رہا ہے۔ ایران دشمنوں کی ہر طرح کی ممکنہ جارحیت اور خطرات کا مقابلہ کرنے کے لئے دفاعی اور فوجی تیاری کے لحاظ سے بہت ہی آئیڈیل پوزیشن میں ہے ۔ انہوں نے مزید کہا تھا کہ ایران نہ صرف یہ کہ اپنی دفاعی ضرورت کے سبھی وسائل کو خود تیار کرتا ہے بلکہ دیگر ممالک کی ائیر ڈیفنس سسٹم کی ضروریات کو بھی پورا کرسکتا ہے۔ یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ ایران نے مقامی طور پر تیار کردہ اپنا فضائی دفاعی نظام ایک ایسے وقت میں اپنی مسلح افواج کے حوالے کیا ہے جب امریکہ کی جانب سے اعلان پر عائد کی جانے والی پابندیاں مزید سخت ہوتی دکھائی دے رہی ہیں ، یہی نہیں بلکہ موجودہ حالات میں امریکی بحری بیڑوں کی ”پیٹریاٹ” کے ہمراہ موجودگی سے صورتحال میں کشیدگی بھی مزید بڑھ رہی ہے۔ امریکہ کی جانب سے ایران پر عائد کردہ

پابندیوں کی وجہ سے ایران سے تعلقات رکھنے والے مغربی ممالک بھی فی الوقت کافی مشکلات کا شکار ہیں۔ اس ضمن میں ایرانی وزیر خارجہ محمد جواد ظریف نے گذشتہ روز مغربی ممالک پر زور دیا کہ وہ امریکہ کی جانب سے عائد کی جانے والی پابندیوں کے باوجود اس کے ساتھ معمول کے تعلقات استوار کریں بصورت دیگر نتائج کا سامنا کرنے کے لیے تیار ہوجائیں۔





اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں
تازہ ترین خبریں

دلچسپ و عجیب

بزنس