شروع اللہ کے نام سے جو بڑا مہربان نہایت رحم والا ہے ِ

ضمنی انتخابات فوج کی نگرانی میں کرانے کا فیصلہ


اسلام آباد(ویب ڈیسک)ملک بھر میں ضمنی انتخابات فوج کی نگرانی میں کرانے کا فیصلہ کر لیا گیا ۔ فیصلہ الیکشن کمیشن آف پاکستان کی جانب سے ریٹرننگ افسران اور صوبائی الیکشن کمشنر کی ہدایت پر کیا گیا۔ انتخابات کے دوران پاک فوج کے جوان پولنگ اسٹیشنز کے اندر اور باہر تعینات ہوں گے۔ الیکشن کمیشن نے فوج کی تعیناتی کا مراسلہ وزارت دفاع کو ارسال

کر دیا ہے۔ذرائع کے مطابق ریٹرننگ افسران نے صوبائی الیکشن کمیشن کو خط لکھا جس میں ضمنی انتخابات میں سیکورٹی کی ذمہ داری فوج کے سپرد کرنے کا مطالبہ کیا گیا تھا۔ خط میں کہا گیا تھا کہ انتخابات کے وقت پولنگ اسٹیشن کے اندر اور باہر فوج تعینات کی جائے۔الیکشن کمیشن کی جانب سے جاری کردہ شیڈول کے مطابق قومی اسمبلی کے 11 جبکہ صوبائی اسمبلی کے 26 حلقوں میں ضمنی انتخابات 14 اکتوبر کو ہوں گے۔یاد رہے کہ قومی اسمبلی کے 2 اور صوبائی اسمبلیوں کے 7 حلقوں میں الیکشن ملتوی ہوا تھا جب کہ عام انتخابات میں زیادہ نشستوں پر جیتنے والوں نے 28 نشستیں چھوڑی ہیں۔قومی و صوبائی اسمبلیوں کے جن حلقوں پر ضمنی انتخاب ہونا ہے ان میں یہ شامل ہیں: قومی اسمبلی کے حلقوں این اے 35 بنوں، این اے 53 اسلام آباد، این اے 56 اٹک، این اے 60 راولپنڈی، این اے 63 راولپنڈی، این اے 65 چکوال، این اے 69 گجرات، این اے 103 فیصل آباد، این اے 124 لاہور، این اے 131 لاہور اور این اے 243 کراچی میں ضمنی الیکشن ہونا ہیں ۔پنجاب اسمبلی کے حلقہ پی پی 3، 27، 87، 103، 118، 164، 165، 201، 222، 261،

272، 292، 296 میں ضمنی انتخاب ہوگا جب کہ سندھ اسمبلی کے حلقہ پی ایس 30، 87، بلوچستان اسمبلی کے حلقہ پی بی 35 اور پی بی 40 میں ضمنی انتخاب ہوگااسی طرح خیبرپختونخوا اسمبلی کے حلقہ پی کے 3، 7، 44، 53، 61، 64، 78، 97 اور 99 میں بھی ضمنی انتخاب 14 اکتوبر کو ہوگا۔





اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں
تازہ ترین خبریں

دلچسپ و عجیب

بزنس