شروع اللہ کے نام سے جو بڑا مہربان نہایت رحم والا ہے ِ

پاکستانی فاسٹ بائولر نے تاریخی ٹیسٹ میں نئی تاریخ رقم کر دی ۔۔ صرف 6سکور پر آئرلینڈ کے کتنے کھلاڑی آئوٹ کر ڈالے ؟


ڈبلن (مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان اور آئر لینڈ کے درمیان تاریخی ٹیسٹ کے تیسرے روز قومی ٹیم نے 310 رنز 9 کھلاڑی آؤٹ پر اننگز ڈکلیئر کر دی۔ پاکستان کی جانب سے فہیم اشرف نے سب سے زیادہ 83 رنز بنائے جبکہ شاداب خان نے 55 رنز کی عمدہ اننگز کھیلی۔ پاکستانی فاسٹ باؤلرز نے آئرلینڈ کی بیٹنگ لائن کے پرخچے اڑا دئیے ہیں اور کھانے کے

وقفے تک صرف 5 کے مجموعی سکور پر 3 کھلاڑیوں کو پویلین کی راہ دکھا کر آئرلینڈ کیلئے خطرے کی گھنٹی بجا دی ہے۔ پاکستان کی جانب سے محمد عباس نے دو وکٹیں حاصل کیں جبکہ محمد عامر نے ایک کھلاڑی کو پویلین کی راہ دکھائی۔ تفصیلات کے مطابق آئرلینڈ کیخلاف واحد ٹیسٹ میچ کے تیسرے روز قومی ٹیم نے 268 رنز 5 کھلاڑی آؤٹ پر اننگز کا آغاز کیا تو 276 کے مجموعی سکور پر شاداب خان 55 رنز بنا کر آؤٹ ہو گئے۔ انہوں نے ٹیسٹ کرکٹ میں اپنے کیرئیر کی پہلی نصف سنچری بنائی اور ٹیم کی پوزیشن کو سنبھالنے میں اہم کردار ادا کیا۔ 304 کے مجموعی سکور پر فہیم اشرف بھی 83 رنز بنا کر آؤٹ ہو گئے جبکہ مجموعی سکور میں صرف 2 رنز کے اضافے کے بعد محمد عامر بھی پویلین لوٹ گئے، انہوں نے 13 رنز بنائے جس کے بعد کپتان سرفراز احمد نے اننگز ڈکلیئر کرنے کا اعلان کر دیا۔ پاکستان کی پہلی اننگز کے جواب میں آئرش بیٹنگ لائن پاکستانی فاسٹ باؤلرز کے سامنے لڑکھڑا گئی اور کھانے کے وقفے تک صرف 5 کے مجموعی سکور پر 3 کھلاڑی پویلین لوٹ گئے۔ محمد عباس نے عمدہ باؤلنگ کرتے ہوئے 2 شکار کئے جبکہ محمد

عامر نے ایک وکٹ حاصل کی۔ گزشتہ روز آئرلینڈ نے ٹاس جیت کر پہلے پاکستانی ٹاپ آرڈر ایک مرتبہ پھر ناکام ہوا اور ابتدائی 6 بلے بازوں کے جلد آؤٹ ہونے کے بعد شاداب خان اور فہیم اشرف نے محتاط انداز سے کھیلتے ہوئے ٹیم کو سہارا دیا اور دونوں کھلاڑیوں نے اپنی پہلی نصف سنچری سکور کی۔ قومی ٹیم نے آئرلینڈ کے خلاف 76 اوورز میں 6 وکٹوں کے نقصان 268 رنز بنائے تھے کہ کم روشنی کے باعث میچ کو روک دیا گیا جو دوبارہ شروع نہ ہو سکا۔ پاکستان کی جانب سے اظہر علی اور امام الحق نے اننگز کا آغاز کیا لیکن 13 کے مجموعی اسکور پر اظہر علی 4 رنز بنا کر پویلین لوٹ گئے۔پہلا ٹیسٹ میچ کھیلنے والے امام الحق ون ڈے ڈیبیو کی طرح بڑی اننگز نہ کھیل سکے اور 13 کے مجموعی سکور پر 7 رنز بنا کر ایل بی ڈبلیو ہو گئے۔ اوپننگ بلے بازوں کے جلد آؤٹ ہونے کے بعد حارث سہیل اور اسد شفیق نے محتاط انداز میں کھیل شروع کیا لیکن کھانے کے وقفے کے بعد جلد ہی حارث سہیل 31 کے انفرادی سکور پر پویلین لوٹ گئے۔ بابراعظم بھی 14 رنز بناسکے جبکہ اسد شفیق اپنی 19 ویں نصف سنچری بنانے کے بعد 62 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔قومی ٹیم کے کپتان سرفراز احمد بھی خاطرخواہ کارکردگی دکھانے میں ناکام رہے اور 20 رنز بنا کر آؤٹ ہو گئے۔ واضح رہے کہ آئرلینڈ اور پاکستان کے درمیان تاریخی ٹیسٹ کا پہلا روز بارش کی نذر ہوگیا تھا اور ٹاس بھی نہیں ہوا تھا تاہم دوسرے روز میزبان ٹیم نے ٹاس جیت کر پاکستان کو بیٹنگ کی دعوت دی۔





اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں
تازہ ترین خبریں

دلچسپ و عجیب

بزنس